Hesham A Syed

January 25, 2009

Universality of Prophet ( saw ) – Pointers

Filed under: Islam,Urdu Articles — Hesham A Syed @ 4:42 pm
Tags:

Urdu Article : Huzoor ( saw ) ki afaaqiat : Hesham Syed

حضور ؐ کی آفاقیت  ـ  چند نکات

 – Pointers Universality of Prophet Muhammed (saw)

رب العالمین ( ۱  فاتحہ   ۱ )  اور  رحمت للعالمین ( ۱۲  الانبیا  ۷۰۱ ) کی وضاحت ۔ جن کی اطاعت کو اپنی اطاعت کہا ( ۳ آل عمران  ۲۳۱  ۔ ۴  النسا  ۰۸ ۔ ۸  ۱ ۔ ۴۲  ۴۵) ، جن کی اتباع کو اپنی محبت کا وسیلہ بنا دیا (۳ آل عمران  ۱۳ ) ، جن کی شفاعت کا حصول حا صل ایمان ہے ( ۰۲  ۹۰۱  ۔ ۷۸  ۹۱ ) ،  جن کے دکھ اور اذیت کو (اﷲ نے )اپنا دکھ اور اذیت کہا ( ۹  ۱۶  ، ۳۳  ۷۵ ) ، جن کی دشمنی کو (اﷲ نے ) اپنی د شمنی کہا اور آپ  ؐ کو تقویت دی ( ۸۰۱  ۳ ۔ ) ،  (اﷲ نے )جن کے ہاتھ کو اپنا ہاتھ کہا ( ۸۴   ۰۱ )  جن کے عمل کو اپنا عمل کہا ( ۸  ۷۱ ) ، جن کی گویائی کو اپنا کلام کہا (  ۸۱  ۹۱ تا ۴۲ ۔ ۳۵  ۱ تا ۴ ) ، جن کی خواہش کی تکریم میں قبلہ بدل دیا ( ۲  ۴۴۱ ) ، جن کو مقام محمود عطا کیا ( ۷۱   ۹۷ ) ، جن کو نعمت کثیر اور نہر کوثر عطا کیا (  ۱  ۸۰۱ ) ، اللہ نے قسم کھائی آپؐ  کی جان کی اور شہر مولود مکہ کی ( ۵۱  ۲۷۔۰۹  ۱ ) ، عرش معلیٰ پہ سدر ۃ لمنتہیٰ سے بھی آگے بلا کر ملاقات کی اور آسمانوں کی سیر کرا کے عین الیقین اور حق الیقین عطا کیا ، نظام تکوینی کا ادراک دیا ، ( ۷۱  ۱ ۔ ۳۵  ۵ تا ۸۱ ) جن کی حفاظت کو اپنے اوپر لازم کر لیا ( ۲۵  ۹۴ ۔ ۵  ۷۲ ۔  ۸  ۰۳ ) اور اسی طرح قرآن کی حفاظت کا بھی ذمہ لیا ( ۵۱  ۹ ) ،  صفات الٰہی کا پر تو بنایا مثلاً رحیم ، کریم ، رؤف الر حیم وغیرہ سے مخاطب کیا ۔( ۹ توبہ  ۸۲۱ ) ، آپ ؐ  کو نور کہا ،آپؐ  کی بعثت کو اپنا احسان کہا (  ۳  ۴۶۱ ) ، قرآن کے معجزوںکے علاوہ بہت سارے معجزے کا بھی صدور ہوا جس میں شق القمر بھی ہے ( ۴۵  ۱ ۔۲ )۔

          آیات میثاق : ۳  آل عمران  ۱۸ ، ۲۸ اور ( معراج میں امامت کرا کے اسی میثاق کی پھر تصدیق کی گئی ) ،  انؐ پہ اللہ خود بھی سلام بھیجتا ہے اور فرشتوں و انسانوں و دیگر مخلوقات کو درود و سلام بھیجنے کو کہا ( ۳۳  ۶۵ ) ، زندگی کے ہر معاملے اور تنازعات میں آپ ؐ کے فیصلے کو حتمی فیصلہ قرار دیا ( ۴ ۵۶ ) ، آپ ؐ  کو بہترین نمونہ کہا ( ۳۳  ۱۲ ) ،  آپ  ؐ کو اخلاق کے اعلیٰ درجہ پہ یعنی تکمیل انسانیت پرفائز کیا ( ۸۶  ۴ ) ، 

حدیث :  میں اسوقت بھی نبی تھا جب آدم مٹی اور پانی کے درمیان تھے کی تصدیق قرآن کی مندرجہ بالا آیت کر رہی ہے۔

کلمہ میں آپؐ کے نام کو جز و بنا لیا :  لا الہ  الاللہ  محمد  رسول  اللہ ۔ سب کچھ اللہ نے تخلیق کر لیا تھا اور وقت کا پیمانہ بھی مقرر ہے کہ کون کب کیسے جائے گا اور زمانہ کیسے اور کب بدلے گا پھر اپنے اختتام کو پہنچے گا۔ اگر حضرت آدم  ؑنے اس کلمہ کو لکھا ہوا دیکھا اور اس کے وسیلے سے دعا مانگی تو تعجب کرنے کی اور بحث کی کیا بات ہے ؟

قبل از ظہور رسالت سارے انبیا نے آپؐ کے آنے کی بشارت دی ( ۲ بقرہ  ۹۲۱ ۔ ۱۶ صف  ۶ ۔ ۷ اعراف  ۷۵۱ ۔

 (۸۴ فتح  ۹۲ )۔ تورات و انجیل میں آپؐ کا نام احمد ، فارقلیط اور منحمنا ، نجات دہندہ کے معنی میں ہے۔

فضائل حضور ؐ ساری کائینات پر ( ۲۶ جمعہ  ۴ ۔ ۲ بقرہ  ۲۵۱ ۔ ۴ النسا  ۳۱۱ ۔ ۷۱ بنی اسرائیل  ۷۸ ، ۳ آل عمران  ۴۶۱ )۔

۱۔  للناس ِ رسولا ، تمام لوگ :  ۴  النسا ۹۷ ، ۰۷۱ ۔ ۴۳ سبا  ۸۲ ۔  ۷ الاعراف  ۷۵۱ ۔ اگر اللہ چاہتا تو ہر قریہ کے لئے ایک نبی بھیجتا اور یہ سلسلہ جاری رہتا لیکن اللہ نے آپؐ  ہی کوتا قیامت سارے جن و انس کے لئے نبی بنا دیا ۔ (۵۲ فرقان  ۱۵ )۔ آپؐ  کی سنت قیامت تک کے لیے سند ہے ( ۴ النسا  ۵۶ )، صرف انسانوں کے لئے ہی نہیں بلکہ جنوں کے لیے بھی نبی و رسول ہیں ( ۶۴  احقاف  ۹۲  اور سورہ جن )۔

 روشن چراغ ۔ ۳۳  ۵۴ ، ۶۴ ۔ یہ بھی آفاقیت پہ دلیل ہے ۔جبکہ دوسرے سارے رسول ؑ اپنے علاقے اور امت کے لئے آئے۔ ( ۶۱  النحل  ۶۳ ۔ ۱۱ ھود  ۷۴ ۔ ۱۷ نوح  ۱ )

 ۔ ۲ بقرہ  ۵۸۲ کی تشریح :  پیغمبروں میں کسی میں تفریق نہیں کرتے سے کیا مراد ہے۔ ( تخصیص اور تفریق کی وضاحت )

۔فوقیت :  بعض کو بعض پہ ۔  ۲ بقرہ  ۳۵۲ 

۔فضیلت :  بعض کو بعض پہ ۔  ۷۱  الاسرا  ۵۵

۔ خاتم النبین بنا کر ، دین مکمل کر کے سارے ادیان متروک کر دیئے گئے اور آپ کے اوپر اتارے ہوئے دین کو  پسند فرما کر سارے ادیان پہ غالب کر دیا گیا اور اسے غالب کر دینے کی کوشش کرتے رہنے کو کہا ، غلبہ دین حق اور فتح کی بشارت دی ، اللہ نے خود کو اور فرشتوں کو اور مومنین کو حضور ؐ  کا مدد گار کہا ( ۳۳  ۰۴ ۔ ۸۴  ۱ تا ۳ ۔ ۶۶  ۴ ۔ ۹  ۳۳ )۔

 ایک اہم بات یہ بھی ہے کہ خود حضور ؐ  نے مختلف مملکتوں میں سفیر بھیجے تا کہ وہاں کے بادشاہ حضور ؐ  کی رسالت پہ ایمان لائیں۔ آپؐ  تمام انسانوں پہ گواہ ہونگے۔ ( ابقرہ ۳۴۱ ۔ النحل ۹۸ )۔ اللہ تعالیٰ حضور ؐ  کو امت کے اعمال سے باخبر رکھتا ہے۔

حشام احمد سی

 

Advertisements

Leave a Comment »

No comments yet.

RSS feed for comments on this post. TrackBack URI

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

%d bloggers like this: